Google
20
Aug

ڈفر اعظم کے بائیس نکات (ہفتہ بلاگستان – ۳)

بھیجا ہے  ڈفر نے کیفے ڈی بکواس میں

4,149 بار دیکھا گیا

لو جی اب ڈفر بھی مشورے دیں گے :mrgreen:
ہاں تو اور، جب بڑی بہو دال میں نمک دیکھ سکتی ہے تو ڈفر مشورے کیوں نہیں دے سکتا؟ اور مشورے دینے کے لئے کونسا نیوٹن یا آئن سٹائن ہونا ضروری ہے؟ نہیں نا! اسی لئے ہم حاضر ہیں مشوروں کے ساتھ، مَنّو بھاویں نا مَنّو۔
نئے بلاگران

  1. اچھی تحاریر لکھنے کی کوشش کریں (ہمیشہ ڈفر مت رہیں)۔
  2. اپنی تحریر پسند نا آنا اس کے برا ہونے کی نشانی نہیں، اپنی تحریر اکثر اچھی نہیں لگتی۔
  3. اپنے جاننے والوں میں اپنے بلاگ کی تشہیر کریں اور اہل لوگوں کو اردو بلاگ شروع کرنے کا مشورہ دیں بلکہ ان کو بلاگی دنیامیں زبردستی ٹھونسیں۔
  4. اگر ہو سکے تو اپنے ای میل میسجز میں دستخطوں کے ساتھ اپنے بلاگ کا لنک شامل کریں۔
  5. دوسرے بلاگز کو وزٹ کریں، وہاں تبصرے کریں اور اپنے بلاگ کا لنک چھوڑیں۔
  6. زیادہ وزٹ ہونے والے بلاگز، فورمز اور سائیٹس کو ضرور وزٹ کریں اور وہں اپنے تبصرے کے ساتھ اپنے بلاگ کا ربط دیں (مثال کے طور پر، پی کے پالیٹکس، بی بی سی، پاکستانیت، پروپاکستانی، میٹروبلاگز،۔۔۔ اور بھی کوئی ہوں تو مجھے بھی بتائیں)۔
  7. فیڈ ایگریگیٹرز میں اپنے بلاگ کی فیڈ کو رجسٹر کروائیں مثلاً اردو سیارہ، اردو سب رنگ، بلاگرز پی کے، ۔۔۔
  8. اگر انگریزی سمجھ سکتے ہوں تو انگریزی بلاگز کو ضرور ضرور وزٹ کریں اور وہاں پر تبصروں کے ساتھ اپنے بلاگ کا لنک چھوڑیں کیونکہ یہ حقیقت مسلّمہ ہے کہ اردو بلاگز پاکستان کی بلاگی دنیا میں آٹے میں نمک کے برابر ہیں اور اکثریت کو معلوم ہی نہیں کہ اردو بھی انٹرنیٹ پر موجود ہے۔
  9. بلاگ شروع کر لیں تو اس کو مطلوبہ اور مناسب وقت ضرور دیں۔
  10. ہفتے میں سات نہیں تو دو تین پوسٹیں لازمی لکھیں۔
  11. ہر پوسٹ کو پڑھے جانے اور تبصرے حاصل کرنے کے لئے مناسب وقت دیں (شروع میں ہر دوسرے دن ایک پوسٹ بالکل ٹھیک ہے)۔
  12. تبصروں کا جواب ضرور دیں، بانو کی طرح پوسٹ کر کے بھول مت جائیں یا دارا کی طرح ٹوکا پکڑ کر جواب مت دیں 😀 ۔
  13. اگر جلدی جلدی پوسٹیں ذہن میں آ رہی ہیں تو ایک دفعہ لکھ کر آنے والے دنوں میں شیڈول کر لیں۔
  14. مستقل لکھیں چاہے جیسا بھی لکھیں، وقت کے ساتھ ساتھ تحریر میں پختگی خود بخود آ جائے گی۔
  15. تبصرہ نگار کا کی بورڈ اور ذہن آپ کے بس میں نہیں لیکن اپنی پوسٹ کو فرقہ واریت، لسانی و صوبائی تعصب اور کسی بھی قسم کی نفرت سے پاک رکھیں۔
  16. تبصرہ نگار آپ سے مختلف رائے رکھ سکتا ہے، دل بڑا رکھیں اور کسی کو تضحیک کا نشانہ مت بنائیں۔
  17. نئے آنے والے بلاگروں کی حوصلہ افزائی و رہنمائی کریں۔
  18. ایسی ڈومین پر بلاگ بنانے سے پرہیز کریں جہاں قارئین کے لئے پڑھنا اور لکھنا مشکل ہو اور جو اکثر ڈاؤن رہتی ہوں۔
  19. سینئراردو بلاگران کے ساتھ یہ مسئلہ ہے کہ اکثریت کے پاس اپنے بلاگ کے لئے ہی وقت نہیں نئے آنے والوں کی کیا خبر ہو گی اس لئے سینئر بلاگران سے گزارش ہے کہ نئے آنے والے بلاگز کو بھی وزٹ کریں اور اچھا نا لگنے کے باوجود ان کو بااعتماد ہونے میں مدد دیں۔
  20. کامی صاحب نے بڑی اچھی رائے دی ہے کہ مستقل تبصرہ نگار اپنے گریویٹار ضرور بنائیں تا کہ تبصروں کی فوری پہچان اور تلاش میں آسانی ہو۔
  21. اگر منظرنامہ کو اردو بلاگنگ کا فوکل پوائینٹ بنا کر صحیح معنوں میں فعال بنا دیا جائے تو اردو بلاگنگ کی ترویج میں کافی مدد مل سکتی ہے۔
  22. اردو ماسٹر بھی ایک بڑی اچھی کاوش تھی لیکن افرادی قوت کی کمی کی وجہ سے یہ مطلوبہ کامیابی حاصل نہیں کر سکا۔ میری تجویز ہے کہ اردو ماسٹر کو منظرنامہ میں ہی ضم کر دیا جائے تو منظرنامہ اردو کے موجودہ اور نئے آنے والوں کے لئے ایک ہی پلیٹ فارم بن جائے اور منظرنامہ اور اردو ماسٹر کے منتظمین کو بھی دونوں کو الگ الگ دیکھنے کی بجائے ایک جگہ توجہ رکھنے سے سہولت ہو گی۔

بعد میں شامل کئے گئے کچھ نکات
پہلی ترمیم: بلاگرز دوسرے بلاگرز کے لنکس بھی اپنے بلاگ رول میں شامل کیاکریں جسکے معاملے میں اردو بلاگرز کافی بخیل ہیں

شاباش بڑی اچھی بات ہے، تبصرے کی باری آئی تو پتلی گلی سے نکل لو

ابتک تبصرہ جات 34

 1 

ہم آپ کے 22 میں سے 21 نکات کی بھرپور حمایت کرتے ہیں. اردو ماسٹر کو منظرنامہ میں ضم کرنے سے منظر نامہ اور اردو ماسٹر کی جداگانہ حیثیت بری طرح متاثر ہوسکتی ہے کیونکہ دونوں ہی اپنی طرز کے عمودی بلاگز ہیں اور ان کا جدا رہنا میری ناقص رائے میں زیادہ مناسب ہے چاہے انہیں فی الحال مناسب وقت کمیونٹی کی طرف سے نہ بھی دیا جارہا ہو.

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 21, 2009 بوقت 12:43 صبح
 2 

لے بابے کے چودہ نہیں تھے یاد ہو رہے، اب بائیس اور آ گئے۔ خیر بہت ہی ٹیٹ ہیں یہ نکات۔۔۔

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 21, 2009 بوقت 1:25 صبح
 3 

ڈفر
ہماری قوم (قومِ بلاگراں) کو آپکی رہنمائی میں ترررررررقی کرنے سے کوئی نہیں روک سکتا۔ باقیماندہ منشور بھی جلد ہی منظر عام پر لے ہی آئیں۔
مزاق سے ہٹ کر انتہائی قیمتی مشورے ہیں

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 21, 2009 بوقت 1:57 صبح
 4 

بہت اچھے نکات ہیں سیریس ہیں لیکن ایک بات واضع کرنا چاہیے کہ ورڈ پریس ڈاٹ کام اور ڈاٹ پی کے میں فرق ہے ۔
بڑی بہو افضل صاحب کو کہاہے ۔

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 21, 2009 بوقت 3:19 صبح
 5 

شکریہ ڈفر یہ باتیں پہلے بتا دیتے تو کیا جاتا تمہارا؟

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 21, 2009 بوقت 7:18 صبح
 6 

اگر انگریزی سمجھ سکتے ہوں تو انگریزی بلاگز کو ضرور ضرور وزٹ کریں اور وہاں پر تبصروں کے ساتھ اپنے بلاگ کا لنک چھوڑیں کیونکہ یہ حقیقت مسلّمہ ہے کہ اردو بلاگز پاکستان کی بلاگی دنیا میں آٹے میں نمک کے برابر ہیں اور اکثریت کو معلوم ہی نہیں کہ اردو بھی انٹرنیٹ پر موجود ہے۔

“سب توں پہلے میرے بلاگ کا وزٹ کرو۔ اور سعید انور دی بدقسمتی پہ تبصرہ کرو جی۔ اگر انگریجی آندی ہے تے فئیر“

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 21, 2009 بوقت 10:48 صبح
 7 

یا تو نام بدلو یا پھر یہ عقلمندوں والی باتیں کرنا چھوڑا۔ غضب خدا کا نام رکھا ہے ڈفر اور باتیں اتنے پتے کی کردی ہیں۔

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 21, 2009 بوقت 10:57 صبح
 8 

ایک سو ایک فیصد متفق ہوں۔
یہ بالکل درست ہے کہ نام نہاد سینئیر بلاگرز جن میں مَیں بھی شاید شامل ہوں کے پاس اپنے بلاگ کے لیے ہی وقت نہیں کسی اور کے بلاگ پر کیا تبصرہ کریں گے۔

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 21, 2009 بوقت 1:19 شام
 9 

بہت اچھی تجاویز دیں ہیں آپ نے۔ گو کہ میں تو آپ کے بائیس نکات میں بھی مزاح کی توقع کر رہا تھا لیکن اس کے برعکس بہت سنجیدہ اور قابلِ عمل تجاویز پیش کی ہیں آپ نے۔

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 21, 2009 بوقت 1:26 شام
 10 

یہ تبصرہ صرف گریویٹار چیک کرنے کے لئے ہے.

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 21, 2009 بوقت 3:31 شام
 11 

اچھی تجاویز ہیں.. پر عمل کون کرے گا..!؟

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 21, 2009 بوقت 5:54 شام
 12 

زبردست تجاویز ہیں. شکر ہے کہ میں نے پڑھ لیں ہیں ورنہ گُر کی باتیں کیسے پتا چلتیں.

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 21, 2009 بوقت 6:58 شام
 13 

اور 23واں نکتہ یہ بھی شامل کرو کہ بلاگرز دوسرے بلاگرز کے لنکس بھی اپنے بلاگ رول میں شامل کیاکریں جسکے معاملے میں اردو بلاگرز کافی بخیل ہیں

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 22, 2009 بوقت 12:37 صبح
 14 

مشورے واقعی مفید ہیں لیکن blogspot کے بلاگز پہ کمنٹ کرنا اور بیھنس کے آگے بین بجانا ایک ہی بات ہے ہاں البتہ کسٹم ٹیمپلیٹ ہو تو اور اردو بلاگ ڈوھنڈنے کا آسان طریقہ آپ کو بتاتا ہوں
site:.pk inurl:blog “”اردو
اسیطرح پی کے سے پہلے ڈاٹ کوم بھی لگا سکتتے ہیں اور جہاں میں نے اردو لکھا ہے وہاں اپ ٹاپک لکھیں مطلب اگر آپ شاعری ڈوھنڈ رہے ہیں تو شاعری یا urdu poetry لکھیں
اور اس کو گوگل پر سرچ کر لیں

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 22, 2009 بوقت 11:14 صبح
 15 

site:.pk inurl:blog “urdu poetry”
site:.com.pk inurl:blog “شاعری”

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 22, 2009 بوقت 11:16 صبح
 16 

بس یار تو خود اب اگر ڈفر کہے گا تو تیرے خلافت باقی ڈفر ہتک عزت کا دعوی تو کردیں گے۔
او یار تجھے اپنی نام کی ذرا لاج نہ آئی۔۔۔
اتنی سمجھداری کی باتیں تو عقلمند پوری زندگی میں نہیں کرتے، جتنی ایک ڈفر نے ایک پوسٹ میں کردی ہیں۔۔۔
قیامت آنے والی ہے

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 22, 2009 بوقت 11:31 صبح
 17 

تصحیح: خلافت نہیں خلاف۔۔
ورنہ کوئی نیا لفڑا شروع ہوجائے گا۔۔۔

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 22, 2009 بوقت 11:32 صبح
 18 

بہت عمدہ خیالات ہیں ،مجھے تو آپ کی ان دیکھی شکل میں ٹیناثانی کی طرح کا قاید اعظم ثانی نظر آ رہا ہے.

خیر نکات تو سب ٹھیک ہیں ، بس ایک مستقل مزاجی والا مسیلہ ہے. اور بچپن سے ہے ، اور ختم ہونے مین ہی نہیں آ رہا . 🙁

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 23, 2009 بوقت 11:13 صبح
 19 

بہت عمدہ نکات ہیں، عمل کرنے کی ضرورت ہے..

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 24, 2009 بوقت 12:16 صبح
 20 

بھئی آپ تو خوب مشورے دیتے ہیں بلکہ میں تو کہونگی کہ آپ نے تو مشورے دینے میں بی جمالو کو بھی پیچھے چھوڑ دیا ہے۔ ویسے آپکو داد دونگی کے آپنے آگے آنے والوں کی کئی مشکلیں آسان کر دی ہیں۔

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 24, 2009 بوقت 3:41 صبح
 21 

Thanks alot for the tips, although it was maent to be funny, kaafi acche mashware the, shukria duffer sahab

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 24, 2009 بوقت 3:04 شام
 22 

میں نے اس پوسٹ کے کمنٹوں کا کوئی جواب ہی نہیں دیا اور مجھے پتا ہی نہیں. لیکن جواب کیا دوں؟ :mrgreen:

اسے ذرا جوابیں تو سہی

ستمبر 18, 2009 بوقت 3:47 شام
 23 

نئے اور پرانے بلاگرز کو مشورہ ہے کہ ان نکات کے آئین بننے سے پہلے پہلے موج کرلیں

اسے ذرا جوابیں تو سہی

ڈفر
ستمبر 19 , 2009 بوقت 9:05 شام

@عبدالقدوس, اوئے آئین کی ٹینشن لینے کی ضرورت نہیں
وہ تو بنا ہی ترمیموں کے لئے ہے

اسے ذرا جوابیں تو سہی

ستمبر 18, 2009 بوقت 11:04 شام
 24 

لیجئے ہم نے بھی اپنے بلاگز آپ کے تبصرہ کے خانے میں ٹھونس دیا ہے

http://tariqraheel.wordpress.pk

http://tariqraheel.blogspot.com

http://sweetjaveria.blogspot.com
جو پسند آئے اس کو لسٹ میں شامل کر لیں

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اکتوبر 20, 2009 بوقت 3:59 شام
 25 

[…] ڈفر اعظم کے بائس نکات از […]

نومبر 2, 2009 بوقت 2:22 صبح
 26 

یہ بھی ہونا چاہئے کہ جو تحریر پڑھیں اس پر تبصرہ ضرور کریں. بے شک ایک سمائلی 😀 ہی کمنٹ کر دیں

اسے ذرا جوابیں تو سہی

دسمبر 9, 2009 بوقت 2:52 صبح
 27 

[…] بلاگنگ : (کل ووٹ : ۲۲) منتخب تحریر : ڈفر اعظم کے بائیس نکات ( ۴ […]

مارچ 10, 2010 بوقت 5:16 شام
 28 

ہفتے میں دو تین پوسٹیں؟؟ او یار یہ تیرا دماغ تو نہیں چل گیا؟
ویسے باقی سب پوائنٹس زبردست ہیں. تاہم اردو سیارہ والوں سے مجھے شکایت ہے.

اسے ذرا جوابیں تو سہی

جون 17, 2010 بوقت 12:49 صبح
 29 

ایک اور بات.
یہ رشتہ داروں اور عزیزوں کو اپنے بلاگ کے بارے میں بتانے کی بات سے بھی مجھے اتفاق نہیں.
ایک تو اس میں پرائیویسی کا مسئلہ ہے.
دوسرا ایک مصنوعی فین بیس تخلیق ہونے کا خطرہ ہے. مزہ تو تب ہے جب قاری آپ کو صرف آپ کی تحریروں سے ہی جانے.

اسے ذرا جوابیں تو سہی

جون 17, 2010 بوقت 12:52 صبح
 30 

اچھا لگتا ہے یہ اتفاق اور تعاون
تمام نکات پر نئے بلاگر کی حیثیت سے عمل پیرا ہونے کی پوری کوشش کروں گا – 😀

اسے ذرا جوابیں تو سہی

اگست 26, 2010 بوقت 6:38 شام
 31 

Great Urdu he yar ap logo ki thanks for sharing great article

اسے ذرا جوابیں تو سہی

جنوری 25, 2014 بوقت 10:38 شام
 32 

یار بہت مشکل اردو لیکھی ھے تھوری آسان اردو لکھو پیلیس

اسے ذرا جوابیں تو سہی

DuFFeR Dee
جنوری 30 , 2014 بوقت 11:59 صبح

اس سے آسان اردو کیسے لکھوں یار؟ انگریزی میں اردو لکھوں کیا؟

اسے ذرا جوابیں تو سہی

جنوری 25, 2014 بوقت 10:45 شام

لنک پوسٹ کرنے کی اجازت نہیں، سپیس ڈال کر لنک بریک کردیں، ربط والے تبصرے ختم کر دئے جاتے ہیں

نام (*)
ای میل (ظاہر نہیں کیا جائے گا)*
ویب ایڈریس
پیغام

Follow us on Twitter
RSS Feed فائر فاکس پر سب سے بہترین نتائج واپس اوپر جائیں
English Blog